وزیراعلیٰ گلگت بلتستان حفیظ الرحمن وومن ٹریفکنگ سیکنڈل میں برائے راست ملوث ہیں – جمیل احمد

pppp.jpg

گلگت(ارسلان علی)پاکستان پیپلزپارٹی گلگت بلتستان کے سینئر نائب صدر جمیل احمد نے کہا ہے کہ وزیراعلیٰ گلگت بلتستان حفیظ الرحمن وومن ٹریفکنگ سیکنڈل میں برائے راست ملوث ہیں جس پر ہم اس مطالبہ کرتے ہیں کہ وزیراعلیٰ استعفیٰ دیں اوران کو اپنے نام کے ساتھ لگائے ہوئے قاری اور حافظ کو ہٹا چاہئے کیوں کہ اس کا نام اس سیکنڈل میں آیا ہے،یہ ہم نے نہیں لایا ہے بلکہ گلگت بلتستان کے ایک غیرت مند صحافی نےمنظر عام پر لایا ہے اور آج ان کی باقائدہ آڈیو ریکارڈنگ آئی ہے کل کو ان کی ویڈیو بھی آجائے گی ۔انہوں نے پیپلزپارٹی گلگت بلتستان کے زیر اہتمام شہید عوام ذولفقارعلی بھٹو کی 38ویں برسی کے موقع منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اس سیکنڈل پر پاکستان کے ریاستی ادارے کیوں خاموش بیٹھے ہوئے ہیں اور ان کی خاموشی پر ہم حیران ہیں ،کیا رد الفساد گلگت کے ماسو م لوگوں کے لئے ہے یا ان ظالموں کے لئے ہے ان کے خلاف اس قانون کے تحت کارروائی ہونی چاہئے ۔انہوں نے کہا کہ کسی بھی نالی کے ٹھیکے کے لئے وزیراعلیٰ کا رشتہ دار ہونا یا مسلم لیگ ن کا ورکر ہونا لازمی ہے ۔صوبائی حکومتمیں اہلیت ہی نہیں کہ ایک پوسٹ تک وفاق سے گلگت بلتستان لائے یہ لوگ تو اسلام آباد میں جا کر بات کرنے سے ڈرتے ہیں اور GBہاوس باہر نہیںنکل نہیں سکتے ہیں کیوں کہ انہوں نے گلگت بلتستان کی عزتیں اسلام آباد میں نیلام کردی ہے ہم ان سے اس کے باریں میں پوچھیں گے اور وہ علماءاور دھرنے دینے والے کہا ہیں جو کل تک ہر تقریر میں پیپلزپارٹی کے خلاف بولتے تھے انہوں نے گلگت بلتستان کے عزتیں تک نیلام کی ہے اس پر یہ لوگ کیوں چپ ہیں۔اگر یہ سیکنڈل پیپلزپارٹی کے دور میں ہوتا تومسجدوں کے لاوڈسپیکر بھی پھٹ جاتے، مذہبی جماعتیںاور دیگر سیاسی جماعتیں دھرنے دیتے ۔انہوں نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ پاکستان پیپلزپارٹی گلگت بلتستان کا پانچواں صوبہ بنے اور یہ ہمارے منشور میں بھی شامل ہے اور یہ لوگ ان کشمیریوں سے ساتھ ملے ہوئے ہیں جو گلگت بلتستان کو پاکستان کا آئینی صوبہ بنانے سے روک رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ یہ سسٹم،یہ گورنر ،یہ وزیراعلیٰ جو آج ن لیگ والے مزے لوٹ رہے ہیں وہ پیپلزپارٹی نے بناکے دیا تھا اور اختیارت اسلام آباد سے گلگت منتقل کیا تھا یہ لوگ ایک ایک کرکے اسلام آباد منتقل کررہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ جب بھی پاکستان کی بنیادیں کمزرو ہوگئی ہیں اس وقت پیپلزپارٹی نے اقتدار سنبھال کے اس ملک کو مضبوط کیا ہے اور ان لوگوں کو تو اقتدار پلیٹ میں بن کر ملی ہے اور پیپلزپارٹی کو جب بھی اقتدار ملی ہے اس وقت ملک میں افرا تفری اور خون ریزی کا ماحول ہوتا ہے ۔اس موقع پر صوبائی سیکریٹری اطلاعات سعدیہ دانش نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آمر ضیاءالحق نے ذولفقار علی بھٹو کو فانسی دے کر نہ صرف پاکستان اور پیپلزپارٹی بلکہ عالم اسلام کو نقصان پہنچایا ہے ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان پیپلزپارٹی میں خواتین کو اہم مقام دیا جاتا ہے اور جو خواتین کا حق بھی ہے لیکن گلگت بلتستان میں کوئی بھی سیاسی پارٹی ایسی نہیں ہے جس میں مرکزی سطح پر خواتین کو نمائندگی دی گئی ہو۔سعدیہ دانش نے کہا کہ بھٹو ایک فکر اور سوچ کا نام تھا جس کے ویژن پر آج بھی عمل درآمد کیا جائے تو پاکستان دنیا کا سب سے اہم اور طاقت ور ملک بن جائے گا۔تقریب سے سابقہ ممبر قانون ساز اسمبلی شیرین فاطمہ، پیپلزپارٹی خواتین ونگ کی رہنماءکلثوم مہدی ،BWOکے صدر جمیل قریشی ،زوار فدا حسین ،حسن پاشاو دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ضیاءالحق آج بھی گلگت بلتستان قانون ساز اسمبلی میں بیٹھا ہوا ہے کیوں کہ گلگت بلتستان میں ایک امر کی حکومت چل رہی ہے نہ کہ جمہوری حکومت ہے ۔انہوں نے کہا گلگت بلتستان میں حق ملکیت تحریک سے زیادہ چادر اور چار دیواری کا مسئلہ بن گیا ہے اور ہم چادر اور چاردیواری کے تقدس کے لئے صوبائی حکومت کی اینٹ سے اینٹ بجا دیں گے ۔انہوں نے کہا کہ شہید ذولفقار علی بھٹو آج بھی جیالوں کے دلوں میں زندہ ہے اور بھٹو نے ہی پاکستان کو آئین دی اور گلگت بلتستان کو سیاسی دھارے میں شامل کیا تھا ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s