10 سالوں سے التوا کا شکار 150 منصوبوں کو صرف ڈیڑھ سال کے عرصے میں مکمل کیا گیا : حفیظ الرحمن

سکردو ( رجب علی قمر) وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن نے سکردو میں ڈی آئی جی آفس بلتستان ریجن کا باقاعدہ افتتاح کیا گیا اس موقع پر سپیکر فدا محمد ناشاد ،اراکین اسمبلی آئی جی گلگت بلتستان ظفر اعوان ،ڈی آئی جی بلتستان ،کمشنر بلتستان ریجن عاصم ایوب چاروں اضلا ع کے ڈپٹی کمشنر ز سمیت دیگر محکموں کے اعلیٰ حکاموجود تھے افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ گلگت بلتستان میں امن وامان کو قائم رکھنا سب سے بڑا چیلنج ہے ملک دشمن عناصر کو سی پیک کا منصوبہ ہضم نہیں ہورہا ہے۔ چین کے دشمن اب پاکستان کے بھی دشمن بن گئے ہیں۔ پاکستان اورچین کے دوست اور دشمن مشترکہ ہیں ہمیں مل کر ان قوتوں کا مقابلہ کرنا ہے ماضی میں گلگت میں ہونے والی فسادات سے تمام اضلاع متاثر ہوتے تھے اب نیشنل ایکشن پلان سے قیام امن کو تقویت ملی ہے گلگت میں قیا م امن کے لئے پولیس کا سب سے بڑا کردار رہا ہے علاقے میں امن قائم رکھنا ہماری اولین ذمہ داری ہے اُنہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان میں عدالتیں میرٹ کے مطابق کام کررہے ہیں پہلی بار صوبائی حکومت نے تمام سول جج کو سرکاری گاڑیاں اور مراعات مہیا کی ہے جب قانون اور انصاف عام ہوں گے تو تمام مسائل کو خود بخو د حل ہوں گے اُنہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت ترقی کے پہیے کو آگے لے کر جانا چاہتے ہیں صوبائی حکومت نے ڈیڑھ سال کے عرصے میں خطے کا نقشہ تبدیل کیا ہے 10 سالوں سے التوا کا شکار 150 منصوبوں کو صرف ڈیڑھ سال کے عرصے میں مکمل کیا گیا ہے اور علاقے میں جاری ترقیاتی سکیموں پر تیزی کے ساتھ کام جاری ہے تمام اہم پراجیکٹس کا کا ٹائم پریڈ سے پہلے مکمل کرنے کا تہیہ کررکھا ہے چھومیک پُل کے بننے کے بعد نیو سکردو سٹی کا قیام بھی سکردو ڈویلپمنٹ منصوبے میں شامل ہے گلگت کی طرح بلتستان میں بھی سیف سٹی منصوبہ اگلے مرحلے میںرکھا جارہا ہے آیندہ سال محرم سے پہلے سکردو میں بھی میونسپل کارپوریشن کا منصوبہ شروع ہوگا گلگت میں ایل پی جی پلانٹ کا منصوبے پر کام شروع کیا جارہا ہے جس کے بعد جلد سکردو میں بھی شروع کریں گے جس سے بجلی کے نظام میں بہتری میں مدد ملے گی اُنہوں نے کہا کہ آیندہ جون سے پہلے بلدیاتی انتخابات منعقد ہوں گے جس سے ترقی کا دائرہ کار مزید بڑھ جائے گا وزیر اعلیٰ حافظ حفیظ الرحمن نے کہا کہ گلگت بلتستان پولیس اور تما م اضلاع کے تھانوں کو مانیٹرینگ کرنے کے لئے جدید کیمروں کے زریعے سے مانیٹر کیا جائے گا پنجاب کی طرز پر گلگت بلتستان میں بھی تھانوں کو جدید مانیٹرنگ سسٹم سے کور کی جائے اُنہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان میں تھری جی اور فور جی کی نیلامی آخری مراحل میں ہے جس کے بعد علاقے میں انٹرنیٹ سروس کا نظام بہتر ہوجائے گا اُنہوں نے کہا کہ شیخ محسن علی نجفی کانام شیڈول فور میں شامل کرنے میں صوبائی حکومت کا کوئی کردار نہیں ہے وفاقی وزارت داخلہ نے ان کا نام شیڈول فور میں شامل کرلیا ہے شیخ محسن کی علاقے کے لئے کافی خدمات ہے جو کسی سے ڈھکی چھپی نہیں ہے ان کا نام شیڈول فور سے نکالنے کے لئے وفاقی حکومت کو سفارشات بھیج دیں ہے ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s