سی پیک منصوبے میں گلگت چترال ایکسپریس وے تاجکستان روڈ اور پھندر 80 میگاوات پاور ہاوس شامل کیا جائے ۔نو منتخب صوبائی وزیر فدا خان فدا

fida ullah fidA.jpgگلگت(ارسلان علی) نو منتخب صوبائی وزیر فدا خان فدا نے کہاہے کہ وزارت کو ایک انتہائی اہم اور مقدس منصب سمجھتا ہوں ماضی میں اس منصب کے ساتھ زیادتی میں کوئی کسر نہیں چھوڑا گیا لیکن اب ایسا ہر گز نہیں ہونے دیا جائے گا ۔جمعہ کے روزانہوں نے حلف برداری کے بعد مقامی ہوٹل میں عمائیدین غذراور حلقہ کے عوام سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اس مقدس منصب اور عوام غذر بالخصوص اور عوام گلگت بلتستان کی بالعموم عزت نفس کا خیال رکھنا ہوگا روز اول سے ہی تعلیم کی فروغ اور کرپشن کی خاتمے کے لئے اپنا کردار ادا کررہاہوں، جب سے ہماری حکومت بنی ہے رشوت کا کلچر ختم ہوگےا ہے ہم نے میرٹ پر کام کرنے کی عہد کی ہے بے شک اس عمل سے کوئی ناراض ہو فرق نہیں پڑتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ گوپس یاسین کو ضلع بنانے کے حوالے سے میں نے اسمبلی میں جو قرار داد پیش کی ہے اس پر ضرور کام ہوگا اور نئے حلقوں کے حوالے سے بھی مطمئن ہوں ۔انہوں نے سی پیک منصوبے کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ گلگت چترال ایکسپریس وے تاجکستان روڈ اور پھندر 80 میگاوات پاور ہاوس ہر حال میں شامل کیا جائے ۔انہوں نے کہا کہ سیاسی مخالفین کے بیانات سے کوئی فرق نہیں پڑتا ہے میں اپنے خدا کے سامنے صاف ہوں ،عوام کی تجاویز کی قدر کرتا ہوںاور عوام کے مشوروں سے ہی عوام کا خدمت کرتا رہونگا۔اس موقع پر سابق ممبر قانون ساز اسمبلی سرفراز شاہ ،گلگت بلتستان امن کمیٹی کے ممبر سلیم خان ،سابق امیدور قانون ساز اسمبلی ایڈووکیٹ علی خان اور پروفیسر ریٹائرڈ گل محمد سمیت مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے رہنماوں نے کہا کہ تحصیل گوپس یاسین سے تاریخ میں پہلی دفعہ صوبائی حکومت میں نمائندگی دینے اور فدا خان فدا کو وزیر منتخب کرنے پر ہم وزیر اعلیٰ حفیظ الرحمن کے مشکور ہیں اور امیدکرتے ہیں کہ نومنتخب وزیرکرپشن سے اپنے دامن کو بچاتے ہوئے عوام کی سعی معنوں میں نمائندگی کرینگے اور گلگت بلتستان کی تعمیرو ترقی اور قانو ن سازی میں اپنے صلاحیتوں کو بہتر انداز میں بروکار لائینگے ۔انہوں نے کہا کہ ہماری سیاسی وابستگیاں مختلف سیاسی پارٹیوں سے ہے لیکن علاقے کی ترقی کے لئے ہم حکومت وقت اور نومنتخب وزراءکے شانہ بشانہ کھڑے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہم فدا خان فدا سمیت دیگر نومنتخب وزراءسے یہ کبھی امیدنہیں رکھیں گے کہ وہ ماضی کو دہر ے اور نوکریون کا جمعہ بازار لگائے ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s