ابتدائی تعلیم میں مقامی زبان کو لازمی قرار دینا خوش آئندبات ہے ؛ فدا محمد ناشاد

ابتدائی تعلیم میں مقامی زبان کو لازمی قرار دینا خوش آئندبات ہے ؛ فدا محمد ناشاد


گلگت(ابرار حسین استوری) سابق امیدوار قانون ساز کونسل یوسف علی ناشاد نے اپنے ایک آخباری بیان میں کہا ہے کہ ابتدائی تعلیم میں مقامی زبان کو لازمی قرار دینے کی قرارداد پیش کرنا ایک خوش آئند عمل ہے اس سے ہمارے نونہال اپنی تاریخ،ثقافت اور زبان کی اہمیت پر بھی جانکاری حاصل ہوگیی ہاں آہستہ آہستہ مقامی بولی دم توڑتی نظر آرہی ہے جبکہ بہت سے احباب مقامی زبان کو اپنی صحیح صورت میں پیش کرنے کی جدوجہد میں لگے ہیں ان کا یہ کردار قابل رشک ہے سابق امیدوار نے کہا کہ اس کے ساتھ ایک اور قرارداد پیش کرنے کی ضرورت ہے وہ یہ کہ تمام سرکاری و نجی اداروں میں بانی پاکستان کی تصویر کے ساتھ بانیان گلگت بلتستان کی تصویر آویزاں کرنے کی قرارداد نہ صرف پیش بلکہ فی الفور پاس کرنے کی ضرورت ہے تاکہ ہر ایک کو معلوم ہوجائے کہ گلگت بلتستان از خود یہاں کے قومی ہیروز کی قربانی سے آزاد ہوا ہے اور ہمارے آزادی کے ہیروز جنہوں نے ایک انوکھی تاریخ رقم کی ہے اب تک ان کی تصویر آویزاں نہ کرنا ان کی قربانی اور ہماری آزادی کی جدوجہد کو نظر انداز کرنے کے مترادف ہے یہ سوال میں ارکان اسمبلی پر چھوڑتا ہوں اس امید کے ساتھ کہ وہ ضرور اوامی مینڈیٹ اور جی بی کے ہیروز کو ان کا مقام دلانے میں کوئی پس و پیش سے کام نہی لیں گے۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s