گلگت بلتستان میں ابتداءی تعلیم کے لیےاین جی اوزکا کردار قابل تعریف ہے لیکن شعبے تعلیم کو بہتر کرنے کی کوشش کررہی ہے۔ وزیرمملکت برائے تعلیم اینڈ پروفیشنل ٹریننگ

rupani foundation gilgit

گلگت(ارسلان علی)وزیرمملکت برائے تعلیم اینڈ پروفیشنل ٹریننگ انجینئر بلیغ الرحمن نے کہا ہے کہ حکومت ابتدا ءہی سے بچوں کی بہتر تعلیم کے لئے اقدامات اٹھارہی ہے اور اس حوالے سے روپانی فاﺅنڈیشن جیسی این جی اوز اس میدان میں اہم کردار ادا کر رہی ہیںاوراس ادارے کی تعلیم کے شعبے میں خدمات قابل تعریف ہیں ۔انہوں نے بدھ کے روز گلگت کے ایک مقامی ہوٹل میں غیر سرکاری فلاحی ادارہ روپانی فاونڈیشن کی جانب سےبنایا گیا ابتدائی تعلیمی سنٹر کی افتتاحی تقریب سےخطاب کرتے ہوئے کہا کہ ای سی ڈی کا یہ پروگرام بچوں کے مستقبل کے لئے بہت اہم ہے اورمجھے خوشی ہورہی ہے۔وزیر مملکت نے ای سی ڈی سنٹر میں موجود جدید سہولیات کی تعریف کی اور گلگت بلتستان میں اس سنٹر کے قیام کے لئے روپانی فاونڈیشن کی تعریف بھی کی ۔ اس موقع پر وزیر مملکت برائے تعلیم اینڈ پروفیشنل ٹریننگ انجنیئر بلیغ الرحمان نے ای سی ڈی گریجویٹس اور ان کے والدین میں اسناد تقیسم کیں۔تقریب سے سپیکر گلگت بلتستا ن اسمبلی فدا محمد ناشاد اور وزیر تعلیم گلگت بلتستان ابراہیم ثنائی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ابتدا ءہی سے ننھے بچوں کی تعلیم و تربیت کرنا بہت اہم اقدام ہے۔ یہ ایک گیم چینجر پروگرام ہے اس سے آنے والی نسلوں کو بھی معیاری تعلیم کے حصول میں مدد ملے گی۔ وزیر تعلیم نے کہا کہ روپانی فاﺅنڈیشن گلگت بلتستان میںفروغ تعلیم میں اہم کردار ادا کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تعلیم کے حوالے سے حالیہ شائع ہونے والی رپورٹ کے مطابق گلگت بلتستان میں بھی تعلیم میں نمایاں تبدیلیاں رونما رورہی ہیں۔ رپورٹ کے مطابق گلگت بلتستان کے کچھ علاقے تعلیم میں بہت آگے ہیں جن میں ہنزہ اور نگر سر فہرست ہیں جبکہ بد قسمتی سے کچھ علاقے تعلیم میں بہت پیچھے ہیں وہاں پر بھی تعلیم کی سہولیات پہنچانے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ گلگت کے علاوہ گلگت بلتستان میں کئی اور ریجنز ہیں اور وہاں پر بھی اس قسم کے پروگرامز کی اشد ضرورت ہے ۔غذر، سکردو اور دیامر میں بھی ان پروگرامز کا انعقاد ضروری ہے ۔ انہوںروپانی فاﺅنڈیشن کے چیئرمین نصرالدین روپانی سے بھی اپیل کی کہ ان علاقوں میں بھی روپانی فاﺅڈیشن انپے ادارے قائم کریں اور وہاں کے ننھے بچوں کو بھی اس قسم کی تعلیم فراہم کی جائے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت تعلیم کے شعبے پر توجہ دے رہی ہے اور ہم ہر قسم کے تعاون کے لئے تیار ہیں۔ اس سے قبل روپانی فاﺅنڈیشن کے چیئر مین اور فاﺅنڈر نصر الدین روپانی نے اپنے ویلکم سپیچ میں وزیر مملکت برائے تعلیم و فنی تربیت بلیغ الرحمان کا شکر یہ ادا کیا ۔ انہوں نے کہا کہ وزیر مملکت نے تعلیم کے شعبے میں ہماری ہر وقت مدد کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ انفارم پیرنٹس پروگرام (اگاہی والدین ) پروگرام بہت ہی اہمیت کے حامل ہے۔ اس پروگرام کا مقصد جب والدہ امید سے ہوتی ہے تو اسی وقت سے ہی ہم بچے کے والدین کو تربیت دیتے ہیں۔ بچے کی پیدائش کے بعد پھر بچے کے تربیت کی جا تی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ ایک یونیک پروگرام ہے جس کے ذریعے ہم بچوں اور ان کے والدین کو شروع دن سے ہی تربیت دیتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں خوشی ہورہی ہے کہ کئی والدین بچوں سمیت اس پروگرام کے ذریعے ٹرین ہوگئے ہیں۔ انہوں نے سرٹیفیکیٹس حاصل کرنے والے تمام بچوں اور ان کے والدین کو مبارکباد دی اور امید ظاہر کی کہ یہ تربیت آنے والے وقت میں مدد گار ثابت ہوگی۔اس موقع پر ننھے گریجویٹس نے مہمان خصوصی اور دیگر مہمانوں کے لئے ویلکم سانگ، گریجویشن سانگ اور گروپ پویم پیش کئے جبکہ ننھے بچوں نے روائتی لباس میں روائتی رقص بھی پیش کیا ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s