ضلع استور کے گاؤں کیلشئی کے عوام تعلیم، صحت اور دیگر بنیادی ضروریات سے محروم

Asotre No education no health.jpg

گلگت(خبرنگارخصوصی)ضلع استور کے دور آفتادہ گاؤں کیلشئی اس جدید دور میں بھی بنیادی انسانی ضروریات سے محروم ہے۔ 2016میں بھی طالبات کے لئے کوئی سکول نہیں اور طلبہ کے لئے صرف پرائمری تک کا سکول ہے وہ بھی نہ ہونے کے برابر ہے اور اس کے بعد طلباء اپنی تعلیمی زندگی کو خیرآباد کہ کر گلگت اور دیگر شہروں میں ہوٹلو ں اور دوکانوں پر مزدوری کرنے لگ جاتے ہیں۔ ہسپتال اور دیگر انسانی بنیادی ضروریات میسر نہ ہونے کی وجہ سے علاقے سے بڑی تعداد میں لوگ نقل مکانی کرنے پر مجبور ہیں۔ گلگت بلتستان کا خوبصورت اور سیاحوں کا مسکن و دفاعی لحاظ سے بھی اہمیت کے حامل ضلع استورکے 30سے زائد گھرانوں پر مشتمل گاؤں یکیلشئی اس دور جدید میں بھی بنیادی انسانی ضروریات سے محروم ہے۔ لڑکیوں کے لئے ہائی سکول اور کالج دور کی بات پرائمری تک کا سکول بھی نہیں ہے اور لڑکوں کے لئے صروف پرائمری تک سکول ہے۔ جس کے وجہ سے لڑکے اپنی تعلیمی زندگی کو خیر باد کہ کر گلگت اور دوسرے شہروں میں ہوٹلوں، چائے خانوں اور دیگر دکانوں پر نو عمری میں ہی مزدوری کرنے پر مجبور ہوجاتے ہیں۔ بنیادی ضروریات نہ ہونے کی وجہ سے اس علاقے سے 200سے زائد لوگوں نے نقل مکانی کی ہے اور ابھی تک وہ لوگ رہائش پزیر ہیں جن کی کسی دوسرے علاقے میں جاکر رہائش اختیار کرنے کی سکت نہیں اور وہ معاشی طور پر اتنے مستحکم نہیں ہیں۔ استورکے دور داراز علاقے کیلشئی پائین اور بالاکے عمائدین غلام محمد،سرتاج عالم،عبدالمنان اور زاہد لون نے میڈیا کے نمائندوں کو اپنے علاقے کا حال بتاتے ہوئے کہا کہ اس دور جدید اور 2016ء میں بھی ہمارے گاؤں کیلشئی میں حکومت کی اور کسی بھی قسم کی این جی او کی طرف سے کوئی توجہ نہ ہونے کی وجہ سے ہم بنیادی انسانی ضروریات سے محروم ہیں اور ہمارے بچے پرائمری تک تعلیم حاصل کرنے کے بعد ہوٹلوں اور دکانوں پر مزدوری کرنے پر مجبور ہوجاتے ہیں۔انہوں نے وزیراعلیٰ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن،کمانڈر ایف سی این اے، کمانڈر80بریگیڈ، صوبائی وزیر تعلیم، صوبائی وزیر فرمان علی رانا اور چیف سیکریٹری سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ خدا را ہمارے علاقے کی اور غریب لوگوں کی حالت پر رحم کھائیں اور جغرافیائی اہمیت کے حامل اس علاقے کے لوگوں کو زندگی کی بنیادی ضروریات ان کے علاقے میں فراہم کرنے کی کوشش کریں۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s