سکردومیں پٹرول اورڈیز ل کابحران سنگین ہوگیا

Untitled-1 copy.jpg

سکردو ( مانیٹرنگ ڈیسک)شاہراہ قراقرم کی بندش کے باعث سکردو میں پیڑولیم مصنوعات کی بلیک مارکیٹنگ عام ہو گئی شہر کے مضافاتی علاقوں میں پیڑول فی لیٹر 120روپے کے حساب سے بک رہا ہے مگر انتظامیہ بے بسی کی تصویر بن گئی ہے بلیک مارکیٹنگ انتہائی دیدہ دلیری کے ساتھ کی جارہی ہے مگر ذمہ داروں کو کوئی پوچھنے والا نہیں ہے پیڑول پمپوں پربااثر لوگوں کی گاڑیوں میں فیول بھرے جارہے ہیں بااثر لوگ قانون کی دھجیاں اڑاتے ہوئے پمپوں پر جاتے ہیں اور فیول ڈلواتے ہیں مگر قانون صرف غریبوں کے اوپر چلایا جارہا ہے پیڑولیم مصنوعات کے بحران کی اصل وجہ ہی بلیک مارکیٹنگ بتائی گئی ہے سکردوشہر میں اس وقت پیڑول پمپوں پر تماشہ لگاہوا ہے اور یہاں جنگل کا قانون چل رہا ہے سرکاری اہلکار خود پیڑول لے کر جاتے ہیں غریب ہاتھ پر ہاتھ دھرے بیٹھتے ہیں اور انہیں پیڑول اور ڈیزل فراہم کرنے کےلئے مختلف حیلے بہانے تراشے جاتے ہیں جب پیڑول پمپ مالکان سے پیڑول ڈیزل کی منصفانہ تقسیم کا مطالبہ کیاجاتا ہے تو وہ شریف النفس شہریوں سے الجھ پڑتے ہیں بتایا گیا ہے کہ پیڑول پمپوں پر وافر مقدار میں فیول موجود ہیں تاہم ناقص حکمت عملی کے باعث بحران پیدا ہو رہا ہے انتظامیہ کے ناقص انتظام کے باعث سکردو شہر میں پیڑول اور ڈیزل کا بحران سنگین ہو گیا ہے اور صورت حال مزید پیچیدہ ہو رہی ہے ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s